41

ٹیسٹ ٹیم کو لیڈ کرنا اعزاز ہے اور ذہنی طور پر کپتانی کیلیے تیار تھا، اظہر علی

لاہور: قومی ٹیم کے کپتان اظہر علی کا کہنا ہے کہ ٹیسٹ ٹیم کو لیڈ کرنا اعزاز کی بات ہے اور میں ذہنی طور پر کپتانی کے لیے تیار تھا۔ لاہور میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے قومی ٹیسٹ ٹیم کے کپتان اظہر علی کا کہنا تھا کہ ٹیسٹ ٹیم کو لیڈ کرنا اعزاز کی بات ہے، اگلے چار پانچ سال میرے لیے بہت اہم ہیں، ورلڈ ٹیسٹ چیمپئن شپ میں میچز ہم سے اوپر والی ٹیموں کے ساتھ ہیں، جیت کے ساتھ ساتھ پاکستان کے لیے کھلاڑیوں کو تیار کرنے کی کوشش بھی کروں گا۔
اظہر علی کا کہنا تھا کہ آسٹریلیا میں ہمارا ٹریک ریکارڈ اچھا نہیں تاہم آسٹریلیا میں ہرانے کے لیے سخت محنت کرنا ہو گی، ہار کا خوف نکال کر آسٹریلیا کے خلاف کھیلنا ہوگا۔ انہوں نے کہا کہ سرفراز احمد کی پاکستان کے لیے بہت خدمات ہیں اور وہ بہترین کام کر رہے تھے لیکن فیصلہ پی سی بی کا ہے، میری تمام تر سپورٹ سرفراز احمد کے ساتھ ہے، میں ذہنی طور پر کپتانی کے لیے تیار تھا۔
ایک سوال کے جواب میں ٹیسٹ کپتان نے کہا کہ عامر اور وہاب بہترین باولر ہیں، لیکن وہ اب دستیاب نہیں ہیں، جو بہترین دستیاب ہوں گے انہی لوگوں کو کھلائیں گے، بعض اوقات تبدیلی اچھی ہوتی ہے، نئے لڑکے آئیں اور پرفارم کریں، ان کے لیے بہترین موقع ہے، ٹیم کو جہاں میری ضرورت ہوئی وہاں کھیلوں گا۔
اظہرعلی کا کہنا تھا کہ تین، چار ماہ سے اخبارات میں میری کپتانی کے حوالے سے آ رہا تھا اس لئے میں نے اپنے گھر والوں اور سابق کرکٹرز سے پہلے ہی مشورہ کر رکھا تھا کہ مجھے کپتانی کی پیشکش ہوئی تو کیا کرنا چاہیے جب کہ مصباح کے ساتھ 7،8 سال کرکٹ کھیلا ہوں، چیئرمین پی سی بی اور چیف کوچ کی مکمل سپورٹ میرے ساتھ ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں