آزاد خیال عورت 145

قیامت خود بتائے گی قیامت کیوں آئی ہے

پوری دنیا پہلے ہی کرونا وائرس کے سبب سخت مشکلات کا شکار تھی۔۔ جس کی وجہ سے انسانی صحت کے ساتھ معیشت کا حال بھی سخت مشکلات کاشکار ہے۔۔اس وقت دنیا کے ہر ملک کا کرونا وائرس ہی سب سے بڑا اور اہم مسئلہ ہے لیکن اس بڑھتے ہوئے وائرس کو مکمل ختم کیسے کیا جائے اس بات کو سمجھا ہر سائنسدان کے لیے بہت مشکل ہے۔ اب تک کرونا کے بارے میں مکمل کامیابی حاصل ہوئی نہیں تھی کہ برطانیہ میں کرونا وائرس کی نئی قسم کی شناخت نے سائنسدان لوہے کے چنے چبوا دے ہیں۔ وائرس کی اس نئی قسم کے بارے میں سب سے پہلے ستمبر میں پتہ چلاتھا۔ نومبر کے مہینے میں لندن میں سامنے آنے والے متاثرین کی تعداد کا تقریبا ایک چوتھائی ایسے مریض تھے جو وائرس کی نئی قسم سے متاثر ہوئی تھے۔ دسمبر کے وسط میں یہ تعداد تقریبا دوتہائی متاثرین تک جاپہنچی۔ ملٹن کینز لائٹ ہاﺅس لیبارٹری جیسے کچھ مراکز میں کیے جانے والے ٹیسٹوں کے نتائج پر پڑنے والا فرق صاف ظاہر ہے۔ ریاضی دان یہ حساب کتاب کرنے کی کوشش میں لگے ہوئے ہیں کہ اس کی کتنے مختلف اقسام ہوسکتے ہیں۔
لیکن یہاں یہ حساب لگانا مشکل ہے کہ اس میں لوگوں کے برتاﺅ کی وجہ سے کیا مختلف ہے اور وائرس کی وجہ سے کیا مختلف ہے۔ لندن سے پیش ہونے والی کے رپورٹ کے مطابق اس وائرس کے اقسام کی 70 فیصد تک زیادہ منتقلی ہوسکتی ہے۔ رپورٹ کے مطابق اب تک اس کی کتنی شکلیں یا اقسام زیادہ انفیکشن پھیلانے والی ہیں یہ یقین کے ساتھ نہیں کہا جا سکتا ہے۔
دنیا کے آغا سے لے کر آج تک کچھ سائنسدان ہر چیز کے موجود پر کچھ نہ کچھ دلائل پیش کرتے تھے۔ ایسی صورتحال اور ماضی میں آنے والی وبا پر نظر ڈالو تو معلوم ہوگا کہ ایسی وبا کسی قوم پر جب نازل ہوتی ہے جب خدا اس سے ناراض ہوتا ہے تو وہ وباﺅ کی صورت میں غرور کرنے والوں کاظلم کا راج توڑتا ہے۔
جب ظلم وستم عروج پر ہو، انصاف صرف امیر کے حق کے لیے ہوا۔ امیر آدمی پیسے کے زور غریب انسان پر حاوی ہو۔ بے حیائی کے کام عام ہو جائیں، مظلوم کے حق میں کوئی حق کی بات کرنے والا نہ ہو جب بچوں کے ساتھ زیادتی ہورہی ہو اور صرف دنیا کو دیکھانے کے لئے نام کی عبادت لوگ کر رہے ہوں۔ انسانیت آہستہ آہستہ مررہی ہو۔ مذہب کے نام پر دنیا میں فساد عام ہو جائے تو قیامت خود بتائی گئی قیامت کیوں آئی ہے۔ اللہ پاک پھر ایسی عالمیگر وبائیں کی صورت میں اپنی طاقت کا احساس دلاتا ہے کہ انسان کتنی بھی ترقی کرلے وہ ہر صورت میں اللہ پاک کا محتاج ہی ہے۔ اللہ کے حکم کے بغیر کوئی کچھ نہیں کر سکتا ہے۔
ظلم وستم پر واجب ہے زوال انسان کو
اے انسان تو دیکھ تو صحیح اس وبا کے پیچھے اپنے فساد کو

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں