468

بدنام زمانہ امریکی حراستی مرکز توانتانامو سے سعودی قیدی رہا

واشنگٹن: امریکہ کے بدنام زمانہ حراستی مرکز توانتانامو سے سعودی قیدی کو رہا کردیا گیا۔
میڈیا کے مطابق پینٹاگون کی ترجمان نے اعلان کیا ہے کہ امریکہ گوانٹانامو سے15 برس کی حراست کے بعد ایک سعودی قیدی کو مملکت کے حوالے کرے گا۔سعودی پر 2002کے دوران فرانسیسی آئل ٹینکر پر حملے کی منصوبہ بندی میں تعاون کا الزام تھا۔ امریکی جریدے میامی ہیرالڈ نے یہ اطلاع دیتے ہوئے واضح کیا کہ سعودی قیدی احمد محمد ہزاع الدربی نے امریکی حکام کیساتھ تعاون کی حامی بھر لی جس پر امریکی انسپکٹرز نے اسے سعودی عرب کے حوالے کرنے کی منظوری دے دی۔اگر احمد الدربی کو مملکت کے حوالے کردیا گیا تو الدربی پہلا غیر ملکی قید ی ہوگا جسے جنوری 2017میں ٹرمپ کے برسراقتدار آنے کے بعد رہا ئی نصیب ہوگی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں